گیلری

ہم ایک اور نیک ہیں

بھائی او بھائی میری بات سن ۔۔۔میرے بیٹے کے دل میں سوراخ ہے ۔ڈاکٹر کہتے ہیں کہ چار لاکھ روپیہ لگے گا۔ اگر تین ماہ کے اندر آپریشن نا ہوا تو معاملہ ڈاکٹروں کے ہاتھ سے بھی نکل جائے گا۔بھائی او بھائی کچھ تو کردے نا ۔۔۔اللہ رسول کے نام پر ہی کچھ کر دے۔
’اماں یہاں اسلام خطرے میں پڑا ہے اور تجھے بیٹے کی پڑی ہے۔
چھوڑ بیٹے کے دکھ کو اور نعرہ لگا۔
ہم سے جو ٹکرائے گا۔وہ پاش پاش ہو جائے گا۔۔۔جب پاش پاش ہو جائے گا تو سب کچھ ٹھیک ہو جائے گا۔۔۔‘
حضرت مولانا ایک منٹ ۔۔۔میرا باپ بھی اس فیکٹری کے دو سو نوے جل مروں میں شامل ہے۔یہ رہا اس کی موت کا تصدیقی سرٹیفکیٹ اور یہ دیکھو اس کا لیبر کارڈ۔اب مجھے اپنی دوکان پر رکھ لو نا کسی بھی کام کے لیے۔ورنہ گھر کے پانچ اور لوگ تو جیتے جی مر جائیں گے۔حضرت میں بھیک نہیں مانگنا چاہتا۔حق حلال کی روکھی سوکھی توڑنا چاہتا ہوں۔۔حضرت کم از کم باپ کی موت کا سرٹیفکیٹ تو دیکھ لو۔بھلے نوکری نا دو۔۔۔
’میرے بچے! ہر ایک کا رازق اللہ ہے۔وہی پتھر میں کیڑے کو بھی پالتا ہے۔لیکن ہم نے تو امریکہ کو رازق سمجھ لیا ہے۔۔۔
گو امریکہ گو ۔۔۔امریکہ کا جو یار ہے غدار ہے غدار ہے۔۔۔‘
سر جی ہمارے علاقے میں ہفتے میں تین دن بجلی نہیں آتی جبکہ ساتھ والی کالونی میں روزانہ صرف تین گھنٹے بجلی جاتی ہے۔۔۔سر جی آپ سیانے، عزت دار اور اثر و رسوخ والے ہو۔۔۔آپ ہی کچھ کرو نا۔۔۔ہم دفتروں میں شکایت کرنے جاتے ہیں تو چپراسی اندر نہیں گھسنے دیتا۔سرجی میری بڑی بہن دن میں گھروں گھروں کام کرتی ہے اور رات کو امتحان کی تیاری کرتی ہے۔۔۔سر جی کچھ کرو نا۔۔۔سر جی وہ فیل ہو جائے گی سرجی۔۔۔
’برخوردار جو حکومت اتنی بے بس ہو کہ ڈرون حملے نا ختم کروا سکے وہ لوڈ شیڈنگ خاک ختم کروائے گی۔۔۔
دھرنا دو دھرنا دو ۔۔سرحد سے دور دھرنا دو ۔۔۔لانگ مارچ لانگ مارچ ۔۔ڈرون مخالف لانگ مارچ۔۔۔‘
’بھائی تو بڑا سادہ ہے۔تبھی جاہلوں جیسی بات کر رہا ہے۔ یہ قطرے نہیں یہودیوں کا پھیلایا زہر ہے۔ مقصد ہماری نسلوں کو بانجھ کرنا ہے۔چنانچہ یہودیوں کا سحر توڑنے کے لیے ضروری ہے کہ پہلے فلسطین ان کے چنگل سے آزاد ہو۔ اٹھا میرے ساتھ آواز۔۔۔
وکیل صاحب محترم۔۔۔میرا بیٹا ایک فراڈئیے ڈاکٹر سے جعلی آئی ڈراپس ڈلوا کر بینائی کھو بیٹھا۔وکیل صاحب میں اس دو نمبر ڈاکٹر کو نہیں چھوڑوں گا اور دنیا کی آخری عدالت تک جاؤں گا۔پر میرے پلے آپ کی فیس جوگے پیسے نہیں ہیں۔لیکن آپ ایک خدا ترس آدمی مشہور ہیں۔۔۔بس آپ ہی کے آسرے یہاں تک آیا ہوں۔۔۔وکیل صاحب آپ خاموش کیوں ہیں۔کچھ تو کہیں۔۔۔۔
’حاجی خدا نیکی دے۔تمہیں پتہ ہے کہ اب تو آئی ڈراپس بھی اس انڈیا سے امپورٹ ہوتےہیں جس کا بس چلے تو ہمیں پانی کا ایک ڈراپ بھی نا دے ۔انڈیا نمبر ایک ازلی دشمن اور ہم ہیں کہ اس کے آگے آگے قالین جیسے بچھے جا رہے ہیں۔حاجی ایسی فلک شگاف صدا لگاؤ کہ دلی لرز اٹھے۔
انڈیا سے یاری۔۔۔ نری بیماری۔۔۔انڈیا کا ایک علاج۔۔۔الجہاد الجہاد۔۔۔‘
شاہ جی شاہ جی لوگ آپ کا بہت احترام کرتے ہیں۔خدا کے لیے انہیں سمجھائیں کہ اپنے بچوں کو پولیو کے قطرے ضرور پلوائیں۔اب تو سعودی عرب میں بھی بچوں کے لیے یہ قطرے لازمی ہو گئے ہیں۔شاہ جی اگر یہ قطرے تیس سال پہلے یہاں آ جاتے تو میرا بیٹا یوں اپاہج نا ہوتا۔پلیز شاہ جی کوئی بیان ہی جاری کردیں۔۔۔
’بھائی تو بڑا سادہ ہے۔تبھی جاہلوں جیسی بات کر رہا ہے۔ یہ قطرے نہیں یہودیوں کا پھیلایا زہر ہے۔ مقصد ہماری نسلوں کو بانجھ کرنا ہے۔چنانچہ یہودیوں کا سحر توڑنے کے لیے ضروری ہے کہ پہلے فلسطین ان کے چنگل سے آزاد ہو۔ اٹھا میرے ساتھ آواز۔۔۔
آزادی ِ فلسطین تک۔۔۔جنگ رہے گی جنگ رہے گی۔۔۔بربادیِ یہود تک۔۔ جنگ رہے گی جنگ رہے گی۔۔۔۔‘
کمانڈر صاحب ۔۔۔جناب کمانڈر صاحب۔۔۔یہ کیا ہو رہا ہے۔ایک طرف خود کش حملے کرنے والے فاٹا میں فوجیوں کے سر کاٹ رہے ہیں اور آپ ہیں کہ ستو پئیے بیٹھے ہیں۔یہ سب کیا ہے قبلہ۔۔۔
’اوئے بیٹا جی تو بھی رہا نا نرا سویلین کا سویلین۔ بیٹا جی یہ فاٹا میں جو عناصر ہمارے جوانوں کے سر تن سے الگ کر رہے ہیں یہ بھولے بھٹکے لوگ ہیں۔ہم تو رات دن دعا کرتے ہیں کہ خدا ہمارے گمراہ بھائیوں کو سیدھا راستہ دکھا۔آپریشن راہِ راست بھی تو اسی لیے ہوا تھا بیٹا جی۔اور یہ جو کچھ بھی ہو رہا ہے، ہماری سالمیت کے دشمن موساد، سی آئی اے اور را کے ایجنٹ مٹھی بھر لوگوں کو خرید کے کروا رہے ہیں۔نعوز باللہ کوئی سچا پاکستانی اور مسلمان ایسی گھناؤنی حرکتوں کا تصور بھی نہیں کر سکتا۔
چل شاباش میرے ساتھ سرً سے ًسر ملا۔
اس پرچم کے سائے تلے ہم ایک ہیں ہم نیک ہیں۔
سانجھی اپنی خوشیاں اور بم ایک ہیں ہم نیک ہیں۔‘
(بشکریہ بی بی سی)

Advertisements

One comment on “ہم ایک اور نیک ہیں

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s